ek parwaz dikhai di hai


 

 

ek parwaz dikhai di hai
teri aavaz sunai di hai
jis ki aankhon mein kati thi sadiyan
us ne sadiyon ki judai di hai
sirf ek safah palat kar us ne
saari baton ki safai di hai
phir waheen laut ki jana hoga
yar ne kaisi rihai di hai
aag main kya kya jala hai shab bhar
kitni khus-rang dikhai di hai

(Gulzar)

Advertisements

جواب دیں

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Google+ photo

آپ اپنے Google+ اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Connecting to %s